کل صبح میں نے پانی پینے کے لیے گلاس اٹھایا اور کولر سے پانی ڈال کر پینے لگی کہ پانی میں دو عدد کیڑے موجود تھے۔ بہت حیرانی ہوئی کہ گلاس بھی الٹا رکھا تھا اور پانی بھی کولر سے ڈالا ہے یہ کیڑے کیسے اندر آگئے! بہت سوچ بچار کے بعد آخر اس نتیجے پر پہنچی کہ گرمی کے باعث یہ کولر کی ٹونٹی کے اندر چھپ کر بیٹھے ہونگے اور جیسے ہی پانی ڈالا تو یہ بھی گلاس میں آگئے،فورا پیارے نبیﷺ کی سنت یاد آئی کہ  پانی دیکھ کر پینا چاہیے۔

پیارے نبیﷺکے بتاۓ ہوۓ طریقوں میں ہمارے لیے کس قدر فوائد مضمر ہیں۔اگر دیکھا جاۓ اس جدید دور میں، نہ پہلے جیسے برتن ہیں، نہ وہ رہن سہن مگر پھر بھی ہم ان چھوٹی چھوٹی سنتوں سے دست بردار نہیں ہوسکتے۔اگر ہم پیارے نبیﷺکے طریقوں پر عمل کریں توآخرت میں تو ہمیں اسکا اجر ملے گا ہی اور دنیا میں بھی بہت سے چھوٹے چھوٹے نقصانات سے بچ سکیں گے۔

جیساکہ ایک یہودی کا واقعہ مشہور ہے کہایک مرتبہ ہمارے پیارے نبیﷺصحابہ کرام رضوان اللہ علیھم اجمعین کو پانی پینے کی سنتیں سکھا رہے تھے کہ پانی ہمیشہ دیکھ کر پینا چاہیئے اور تین سانسوں میں پینا چاہیے، اتفاق سے ایک یہودی بھی چھپ کر رسولﷺ کی یہ باتیں سن رہا تھا ہمارے پیارے نبیﷺ کے کلام میں تاثیر ہی ایسی تھی کہ مسلمان یاغیرمسلم، آپﷺ کی تعلیمات سے متاثر ہوۓ بنا نہ رہ سکتا۔

رات کو سوتے سوتے اس یہودی کو بہت زور کی پیاس محسوس ہوئی، جب اس یہودی کو پیاس لگی تو وہ اپنی بیوی سے بولا کہ مجھے اچھی طرح دیکھ کر پانی پلاؤ۔اسکی بیوی بولی،آپ کیسی باتیں کرتے ہیں، چراغ بجھا چکی ہوں، رات کا وقت ہے کیا دیکھ کے پانی پلاؤں؟ ایسے ہی پی لیجیے . پانی تو صاف ستھراہوتا ہے۔

. یہودی کو بڑا غصہ آیا، بیوی سے بولا کہ چراغ جلاؤ اور روشنی میں مجھے پانی دیکھ کر پلاؤ، بیوی سمجھی کہ شوہر پاگل ہو گیا ہے۔
آخر یہودی خود اٹھا اور چراغ روشن کیا، چراغ کی روشنی میں اس کی بیوی نے دیکھا کہ اندھیرے میں وہ جو پانی اپنے شوہر کے پینے کے لیے لائی تھی اس میں ایک سیاہ بچھو تیر رہا ہے، یہودی بھی دیکھ کر حیران ہو گیا۔

بیوی کو اس نے تمام ماجرا کہہ سنایا کہ کس طرح اس نے چھپ کر رسولﷺ کی باتیں سنی تھیں کہ  پانی ہمیشہ دیکھ کر پینا چاہیے ۔صبح کو وہ یہودی پیارے نبیﷺ کی خدمت میں حاضر ہوا اور رات کا واقعہ آپ کی خدمت میں عرض کیا۔آپﷺ نے سن کر تبسم فرمایا یہودی بولا، اے اللہ کے رسول جس مذہب کی احتیاط انسان کی جان بچا لے تو وہ مذہب خود پورے انسان کو دوزخ کی آگ سے کیوں کر نہ بچائے گا؟ اتنا کہا اور وہ یہودی کلمہ پڑھ کر مسلمان ہو گیا۔

Facebook Comments